loader

پاکستان میں کرونا وائرس کےمریضوں کی تعداد 184 ہوگئی۔

  • Created by: editor
  • Published on: 17 Mar, 2020
  • Category: News / News
  • Posted By: Editor

Post Info

اسلام آباد ‘ کراچی‘ پشاور‘ ملتان ‘ووہان‘ دبئی (سپیشل رپورٹ‘ نیوز رپورٹر‘ خصوصی نمائندہ‘ کلچرل رپورٹر‘ شہنوا) سندھ میں کرونا وائرس سے متاثرہ افراد کی تعداد 150 ہو گئی جس کے بعد ملک میں کرونا وائرس کے متاثرہ افراد کی تعداد184ہو گئی ہے۔ ترجمان سندھ حکومت مرتضیٰ وہاب کے مطابق کرونا وائرس کے متاثرین میں سے 119زائرین ہیں جن کو سکھر میں رکھا گیا ہے۔ کرونا وائرس کے 30 متاثرین کراچی اور ایک حیدرآباد میں بھی ہے۔مرتضی وہاب نے اس بات کی تصدیق کر دی۔ سندھ حکومت کے ترجمان کا کہنا تھا کہ عوام سے احتیاط کی پرزور درخواست ہے، شہری غیر ضروری طور پر گھروں سے باہر نہ نکلیں، آپ کی حکومت کورونا وائرس کی وبا پر قابو پانے کی بھرپور کوشش کررہی ہے، ہمیں خوف زدہ ہونے کی ضرورت نہیں ہے۔ سندھ میں صوبائی وزیر تعلیم نے میٹرک اور انٹر کے امتحانات کی نئی تاریخوں کا اعلان کردیا۔ سعید غنی نے بتایا کہ یکم جون سے 15 جون تک نویں دسویں کے علاوہ تمام کلاسوں کے امتحانات ہوں گے اور 15 جون کے بعد نئی کلاسیں شروع ہوں گی جبکہ 15 جون سے نویں اور دسویں کے امتحانات ہوں گے، یہ امتحانات 15 دن تک چلیں گے، امتحانات کے بعد 15 اگست 2020ء کو دسویں جماعت کا نتیجہ جاری کیا جائے گا ، 6 جولائی سے انٹر کے امتحانات ہوں گے، میٹرک اور انٹر کے امتحانات دوپہر کی شفٹ میں ہوں گے، بارہویں جماعت کے نتائج 15 ستمبر کو جاری ہوں گے، کالج میں گیارہویں اور بارہویں جماعت کا تعلیمی سال یکم اگست 2020ء سے شروع ہوگا۔ وزیراعلی سندھ سید مراد علی شاہ کا کہنا ہے کہ کورونا وائرس کے حوالے سے صورتحال تشویش ناک ضرور ہے لیکن کسی بھی صورت میں مارکیٹیں بند کریں گے اور نہ تجویز کریں گے۔ نیوز کانفرنس کے دوران کہا کہ کورونا کے حوالے سے صورتحال تشویش ناک ضرور ہے لیکن پریشان کن نہیں، کورونا وائرس کے پھیلنے کا خدشہ ہے لیکن کسی بھی صورت میں مارکیٹیں نہ بند کریں گے اورنہ ہی تجویز کریں گے۔ مراد علی شاہ کا کہنا تھا کہ اس وقت صرف ان افراد کا ٹیسٹ کیا جارہا ہے جن کی ٹریول ہسٹری ہو یا پھر اس شخص کا کسی ایسے فرد سے کوئی رابطہ ہوا ہو۔ فیصلہ کیا کہ ہر ایک کا ٹیسٹ کریں گے۔ جو بھی کیس آئے گا بتائیں گے کیونکہ چھپانے کا مقصد نقصان پہنچانا ہے۔ تاہم چین سے صوبے میں آنے والے کسی بھی فرد میں کورونا وائرس کی تصدیق نہیں ہوئی۔ 

Related Posts