loader

حکومت 25 ہزار روپے سے کم آمدن والے افراد کو راشن کی خریداری میں معاونت کرے گی۔

  • Created by: editor
  • Published on: 03 Mar, 2020
  • Category: News / News
  • Posted By: Editor

Post Info

اجلاس میں وزیرِاعظم کو حکومت کی جانب سے کیے جانے والے اقدامات اور ان کو مزید مؤثر بنانے کے حوالے سے تجاویز پیش کی گئیں اور معاون خصوصی سماجی تحفظ ثانیہ نشتر نے ملک بھر میں جاری غربت کے ازسر نو سروے کی پیش رفت سے بھی آگاہ کیا، جب کہ مختلف شعبوں سے تعلق رکھنے والے کم آمدنی والے طبقوں کو ریلیف کی فراہمی کے حوالے سے تجاویز بھی پیش کی گئیں۔ اجلاس میں وزیراعظم عمران خان نے کم آمدنی والے افراد کی معاونت کے لئے تمام محکموں سے بریفنگ لی اور فیصلہ کیا کہ 25 ہزار سے کم آمدنی والے افراد کو راشن کی خریداری میں حکومت معاونت کرے گی اور اس حوالےسے وفاق اور صوبے مل کرعملدرآمد کریں گے۔ وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ کم آمدنی والے طبقوں کی بنیادی ضروریات کا خیال رکھنا ریاست کی ذمہ داری ہے جو موجودہ حکومت نے اٹھائی ہے، اس امر کو کو یقینی بنانے کے لیے حکومت ہر ممکنہ کوشش کرنے کے لئے پر عزم ہے۔ وزیراعظم نے آئندہ بجٹ میں راشن خریداری کے لیے رقم مختص کرنے کی ہدایت دیتے ہوئے کہا کہ حکومت سفید پوش طبقے کا سہارا بنے گی، ملک میں کوئی بھوکا نہیں سوئے گا، حکومت آٹا،چینی،دال،گھی کی خریداری میں مدد کرے گی۔ عمران خان نے کہا کہ حکومت معاشرے کے کمزور طبقوں کوبنیادی اشیائے ضروریہ کی فراہمی کے لئے یوٹیلیٹی اسٹور نیٹ ورک کے ذریعے معاونت فراہم کر رہی ہے، جس کا مقصد ایسے افراد اور خاندانوں کو آٹا ، گھی، چینی اور دالوں جیسی روزمرہ کی بنیادی اشیائے ضروریہ کے حصول میں آسانی میسر آئے، کم آمدنی والے طبقے کو مزید ریلیف کی فراہمی کے لئے پیش کی جانے والی تجاویز پر تفصیلی غور کیا جائے تاکہ قابل عمل تجاویز پر عمل درآمد ممکن بنایا جاسکے۔ وزیراعظم کا کہنا تھا کہ مہنگائی میں کمی کے لیے کابینہ کے فیصلے خوش آئند ہیں، یوٹیلیٹی اسٹورز پر مختلف اشیاء پر سبسڈی دینے کے مثبت نتائج ملنا شروع ہو گئے، فروری میں جنوری کے مقابلے میں مہنگائی میں دو فیصد کمی ہوئی، یوٹیلٹی اسٹورز کے ذریعہ اشیائے ضروریہ پر رعایت کا پھل ملنا شروع ہوگیا ہے، افراط زر کو کم کرنے اور شہریوں پر بوجھ کم کرنے کے اقدامات کو جاری رکھیں گے۔

 

Related Posts